شہر قائد میں 9 برس بعد انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی، ویسٹ انڈین کھلاڑی کراچی پہنچ گئے

کراچی: شہرِ قائد میں 9 برس بعد انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی ہورہی ہے اور  پاکستان کے خلاف 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کی سیریز کے لیے ویسٹ انڈیز کی ٹیم کے 11 کھلاڑی کراچی پہنچ گئے ہیں۔

اتوار سے شروع ہونے والی 3 ٹی ٹوئنٹی میچز کی سیریز میں شرکت کے لیے ویسٹ انڈین ٹیم کا پہلا دستہ کراچی پہنچ گیا ہے۔

ٹی ٹوئنٹی کی عالمی چیمپئن ویسٹ انڈیز اور ٹی ٹوئنٹی کی نمبر ون ٹیم پاکستان کے درمیان سیریز کا پہلا میچ آج نیشنل اسٹیڈیم کراچی میں کھیلا جائے گا جو رات 8 بجے شروع ہوگا۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین نجم سیٹھی نے اس بات کی تصدیق کی کہ ویسٹ انڈیز کی ٹیم کے 11 کھلاڑیوں کا گروپ کراچی پہنچ گیا ہے اور مہمان ٹیم میں شامل بقیہ کھلاڑی جلد کراچی پہنچیں گے۔

ویسٹ انڈیز کرکٹ ٹیم کی کراچی آمد کے موقع پر ایئرپورٹ پر سندھ کے وزیر کھیل سردار محمد بخش مہر نے مہمان کھلاڑیوں کو خوش آمدید کہا اور کھلاڑیوں کو سندھی ٹوپی اور اجرک پیش کی۔

کھلاڑیوں کو یہ دونوں تحفے اتنے پسند آئے کہ وہ مقامی ہوٹل میں بھی اسے پہنے رہے، ہوٹل کی انتظامیہ نے ویسٹ انڈین کرکٹرز کا پھولوں کے ہار سے استقبال کیا۔

کپتان جیسن محمد ہوں یا مارلن سیموئلز سب کی خوشی چہروں سے عیاں تھی۔

کپتان جیسن محمد سمیت، مارلن سیموئلز،سیموئیل بدری اور آندرے فلیچر سمیت کرکٹ ویسٹ انڈیز کے ڈائریکٹر آف کرکٹ جمی ایڈمز بھی پاکستان پہنچے ہیں۔

خیال رہے کہ پاکستان اور ویسٹ انڈیز کے درمیان ٹی ٹوئنٹی سیریز کے لیے ٹکٹس فروخت ہوچکے ہیں اور میدان کو بھی سجا دیا گیا ہے۔

شہر قائد میں 9 برس بعد انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی

کراچی کے نیشنل اسٹیڈیم میں آخری انٹرنیشنل ٹیسٹ میچ 21 سے 25 فروری 2009 (پاکستان بمقابلہ سری لنکا)، آخری ون ڈے 21 جنوری 2009 (پاکستان بمقابلہ سری لنکا)اور واحد ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میچ 20 اپریل 2008 کو پاکستان اور بنگلہ دیش کے درمیان کھیلا گیا تھا۔

دونوں ٹیمیں یکم، 2 اور 3 اپریل کو کراچی میں تین ٹی ٹوئنٹی میچز کی سیریز کھیلیں گی۔

ویسٹ انڈیز کرکٹ ٹیم

ویسٹ انڈین ٹیم منیجمنٹ یونٹ میں اسٹیورٹ لاء (ہیڈ کوچ)، الفونسو تھامس (معاون کوچ)، ریان میرون (معاون کوچ)، ویرنن ولیمز (فزیوتھراپسٹ) اور ڈیکسٹر آگسٹس (ویڈیو ڈیٹا اینالسٹ) شامل ہیں۔

ویسٹ انڈین کرکٹ بورڈ کی جانب سے اعلان کردہ اسکواڈ میں جیسن محمد (کپتان)، سیموئل بدری، ریاد ایمرٹ، آندرے فلیچر، آندرے میک کارتھی، کیمو پال، ویرا سیمی پرمال، رومین پاویل، دنیش رام دین، مارلن سیموئلز، اوڈین اسمتھ، چیڈوک والٹن اور کیسرک ولیمز شامل ہیں۔

ویسٹ انڈین کرکٹ بورڈ کے ڈائریکٹر جمی ایڈمز اور ویسٹ انڈیز پلیئرز ایسوسی ایشن کے سربراہ ویول ہائنڈز بھی ٹیم کے ہمراہ پاکستان آئیں گے۔

دورہ پاکستان کے حوالے سے ویسٹ انڈیز کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر جونی گریو نے کہا کہ ’کراچی میں پاکستان سپر لیگ کے فائنل کے کامیاب انعقاد کے بعد ہماری ٹیم ٹی ٹوئنٹی سیریز کیلئے پاکستان پہنچ رہی ہے‘۔

Traffic plan for Match 2 april

ویسٹ انڈیز کی ٹیم اہم کھلاڑیوں سے محروم

پاکستان کا دورہ کرنے والی ویسٹ انڈین کرکٹ ٹیم اہم کھلاڑیوں کی خدمات سے محروم ہے۔

ویسٹ انڈیز کے مستقل کپتان کارلوس بریتھ ویٹ کی عدم دستیابی کے باعث جیسن محمد کو ہنگامی صورتحال میں ویسٹ انڈین ٹیم کا کپتان مقرر کیا گیا ہے۔وہ پہلی بار اپنی ٹیم کی کپتانی کریں گے۔

ویسٹ انڈیز کے ون ڈے کپتان جیسن ہولڈر بھی پاکستان کا دورہ نہیں کریں گے جبکہ ٹی ٹوئنٹی اسپیشلسٹ کرس گیل اور کیرون پولارڈ،لینڈل سمنز،ڈیوائن اسمتھ اور سنیل نارائن بھی ٹیم میں شامل نہیں ہیں۔

قومی ٹیم کا اسکواڈ

دوسری جانب ویسٹ انڈیز کے خلاف سیریز کیلیے قومی ٹیم کے بھی 15 رکنی اسکواڈ کا اعلان کردیا گیا ہے جس میں پی ایس ایل سے 3 لڑکے بھی ٹیم کا حصہ ہیں۔

 قومی ٹیم میں سرفراز احمد، احمد شہزاد، فخرز مان، بابر اعظم، شعیب ملک، فہیم اشرف، محمد نواز، شاداب خان، محمد عامر، حسن علی، راحت علی، عثمان شنواری کو شامل کیا گیا ہے۔

اس کے علاوہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے پی ایس ایل میں شاندار کارکردگی دکھانے والے اسلام آباد یونائیٹڈ کے آصف علی اور حسین طلعت کو بھی ٹیم میں شامل کیا ہے۔

لاہور قلندرز کے نوجوان فاسٹ بولر شاہین آفریدی بھی قومی ٹیم میں جگہ بنانے میں کامیاب ہو گئے ہیں۔

میچ آفیشلز

آئی سی سی نے بھی پاکستان اور ویسٹ انڈیز کے درمیان سیریز کے لیے آفیشلز کا اعلان کر دیا ہے۔

پاکستان اور ویسٹ انڈیز کے درمیان سیریز کو پاکستانی امپائرز ہی سپروائز کریں گے جبکہ پاکستان ویسٹ انڈیز سیریز کے لئے آسٹریلوی بیٹسمین ڈیوڈ بون میچ ریفری ہوں گے، سابق آسٹریلوی بلے باز ڈیوڈ بون 1987 کے بعد پہلی بار پاکستان کا دورہ کریں گے۔

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.